جنسی طور پر ہراساں کرنے والے شخص کی چپلوں سے تواضع، ویڈیو وائرل ہوگئی

جنسی طور پر ہراساں کرنے والے شخص کی چپلوں سے تواضع، ویڈیو وائرل ہوگئی

ملک بھر میں ہراسانی کے واقعات عام ہوتے جارہے ہیں اور ایسے واقعات کی ویڈیوز بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں لیکن اب وقت ہے کہ خواتین اپنے لئے قدم بڑھانا شروع کردیں۔ ایسے ہی ایک واقعہ کی ویڈیو وائرل ہے جس میں ایک عورت نے ایک آدمی کو جنسی طور پر ہراساں کرنے پر گلی میں چپل سے مارا۔

وائرل ہونے والی ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ جیسے ہی ایک عورت اپنے گھر کے سامنے کسی وجہ سے جھکتی ہے تو ایک پی ایس او کا ملازم عورت کو چھیڑ کر گزرتا ہے، عورت اس کو پکڑنے کی کوشش کرتی ہے تو وہ آدمی تیزی سے بھاگ جاتا ہے، ویڈیو کے دوسرے حصے میں دیکھا جا سکتا ہے کہ کچھ لوگ اس آدمی کو پکڑ کر واپس لائے ہیں اور عورت نے ہراساں کرنے والے آدمی کو چپل سے مارنا شروع کر دیا۔

اس واقعہ کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہو گئی جبکہ سوشل میڈیا صارفین نے عورت کو اس بہادری اور دلیری کے مظاہرے پر سراہا۔

ایک سوشل میڈیا صارف نے عورت کی حاضر دماغی کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ یہ بہت اچھا ہے لیکن ہم میں سے بیشتر خواتین اس طرح کے واقعات پر اتنی جلدی سوچ نہیں سکتے ہیں جبکہ اس کے بعد ہم ان گنت راتوں کو اس بارے میں سوچ کر خوفزدہ رہتے ہیں۔

علی گل پیر نے اپنی ٹویٹ میں لکھا کہ یہ نہ تو کوئی فیشن یا ایوارڈ شو تھا اور نہ ہی اس عورت نے مغربی لباس پہنا ہوا تھا۔ اور یہ ہمارے ملک میں بہت ساری خواتین کے ساتھ روزانہ ہوتا ہے۔ اپنے آس پاس والوں سے پوچھیں ، بیشتر کو عوامی سطح پر اس طرح پکڑا یا چھیڑا گیا ہے۔ ہمیں غیرت بریگیڈ کی ضرورت نہیں ، ہمیں مردوں کو بدلنے، تعلیم اور سزا دینے کی ضرورت ہے۔

ایک اور سوشل میڈیا صارف نے کہا کہ ان "بدتمیز” مردوں کو کبھی معاف نہیں کیا جانا چاہئے، ایسے ہی تھپڑ پڑنے چاہیئں انہیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >