شعیب اختر کا بیان سوشل میڈیا پر دلچسپ تبصروں کی زد میں

شعیب اختر کے بیان”اللہ نے کبھی اختیار دیا تو خود گھاس کھا لوں گا مگر فوج کا بجٹ بڑھاوں گا ” پر سوشل میڈیا پر دلچسپ تبصروں کی زد میں

شعیب اختر نے کچھ روز قبل وسیم بادامی کو انٹرویو دیا جس میں انہوں نے کہا کہ اللہ نے کبھی اختیار دیا تو خود گھاس کھا لوں گا مگر فوج کا بجٹ بڑھاوں گا اپنے آرمی چیف کو ساتھ بٹھا کر سارے فیصلے کروں گا۔

اس پر سوشل میڈیا صارفین نے دلچسپ تبصرے کئے ، سوشل میڈیا صارفین نے کہا کہ اقتدار کے بھوکوں میں ایک اور بھوکے کا اضافہ۔ کچھ سوشل میڈیا ایکٹیوسٹ نے کہا کہ لگتا ہے کہ شعیب اختر کا دل بھی شاہد آفریدی کی طرح وزیراعظم بننے کو مچل رہا ہے۔ کچھ سوشل میڈیا صارفین نے کہا کہ شعیب اختر کا مذاق اڑانے کی بجائے ہمیں اپنے کرکٹرز کی عزت کرنی چاہئے، کیا معلوم وہ وزیراعظم بن جائے۔۔

ایک سوشل میڈیا صارف نے کہا کہ شعیب اختر صاحب گھاس کھانے کے لیے اقتدار کیوں چاہیے اگر جذبہ سچا ہےتو ابھی بھی اپنی جائیداد فوج کے حوالے کر کے گھاس کھا سکتےہو۔

ایک اور سوشل میڈیا صارف نے کہا کہ شعیب اختر کا مذاق اُڑانے کی بجائے ہمیں اپنے کرکٹرز کی عزت کرنی چاہیے، خدا معلوم کب کون واقعی وزیراعظم لگ جائے۔

ایک اور سوشل میڈیا صارف نے کہا کہ دولت، شہرت اور اقتدار کے بھوکوں میں ایک اور بھوکے کا اضافہ۔

علی باری نے لکھا کہ جب اختیار ملنے کے بعد اکیلے ہی گھاس کھانی ہے تو ابھی کھا لیں ایک ہی بات ہے تو شعیب اختر کب اپنی زندگی بھر کی کمائی پاکستان کے قومی خزانے میں جمع کروا رہے ہیں؟

ذوالفقار نامی صارف نے لکھا کہ عمران خان کیا وزیر اعظم بنائے گئےہیں، جناب شاہد آفریدی اور جناب شعیب آختر بھی امید سے ہو ہوگئے ہیں۔

فروا نے لکھا کہ آفریدی کو دیکھ کر اقتدار کی خواہش شعیب اختر کے دل میں بھی جگہ پکڑنے لگی حضرت کا فرمان ہے کہ گھاس کھاؤں گا لیکن چیف کے ساتھ بیٹھو ں گا جو کبھی سلیکٹرز کے ساتھ مل کر نہیں بیٹھا وہ آرمی چیف کے ساتھ بیٹھے گا۔

شعیب اختر کے اس بیان پر پر دیگر سوشل میڈیا صارفین نے کھل کر اظہار کیا کچھ سوشل میڈیا صارفین نے شعیب اختر کا مذاق اڑانے والوں پر تنقید کی اور کہا کہ شعیب اختر ایک لیجنڈ ہے اسکی پاکستان کیلئے بے تحاشہ خدمات ہیں۔

  • Kuch log hain jin ko masla sirf Army se hai. Itney Aqalmand hotey to 3 baar esey bandey ko le kar atey jis ne siasat sirf pesa bananey k lye ki hai. Agar yeh faij na hoti to yeh log kab ka mulk ka soda kar chukey hotey

  • He needs to do something such as involvement in social activities and do something for the masses. no need to dream on becoming pm as he is not capable of it. First need to be a good muslim which you are not


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >