نمرہ علی اپنے متعلق جھوٹی یوٹیوب ویڈیوز پر پھوٹ پھوٹ کر رونے لگیں

نمرہ علی اپنے متعلق جھوٹی خبروں پر پھوٹ پھوٹ کر رونے لگیں

انٹرنیٹ پر مشہور ہونے کا خواب ہر کوئی دیکھتا ہے تاکہ آپ کو پروگراموں اور پارٹیز میں بطور مہمان مدعو کیا جائے اور اس طرح اچھی خاصی فین فالونگ بھی مل جاتی ہے۔ یہ سب بہت عمدہ اور پرکشش لگتا ہے جب تک اس عروج کا زوال سے سامنا نہ ہو۔ حال ہی میں سوشل میڈیا کے ذریعے مشہور ہونے والی نمرہ علی کے ساتھ اسی طرح ہوا۔

نمرہ علی میڈیا پر دیئے جانے والے ایک انٹرویو سے مشہور ہوئیں جس میں وہ بڑے معصومانہ انداز سے اپنے جذبات کا اظہار کرتی ہیں کہ وہ کس قدر خوش ہیں گھر سے باہر نکلنے پر، مگر یہ سب زیادہ دیر نہ چل سکا کیونکہ ان کے متعلق عجیب و غریب اور جھوٹ پر مبنی یوٹیوب ویڈیوز نے ان کی خوشیوں پر پانی پھیر دیا۔

نمرہ کی پہلے سامنے آنے والی ویڈیو سے سب لوگ خوب محظوظ ہوئے اور کہیں نہ کہیں ہم سب اسی طرح کی زندہ دلی اور بے فکری بھی چاہتے ہیں۔ مگر اب ٹی وی چینل اور سوشل میڈیا چینلز اپنی ریٹنگ بہتر کرنے کے لیے اس بچی کا استعمال کر رہے ہیں۔

اپنے حالیہ انٹرویو میں نمرہ نے دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ ابھی صرف17 سال کی ہیں اور وہ لوگوں کو خوش کرنا چاہتی تھیں مگر ان کے نام کا استعمال کر کے اپنی ٹی آرپی اور ریٹنگ بہتر کی گئی اتنا کہنا تھا کہ نمرہ پھوٹ پھوٹ کر رونے لگیں اور میزبان بھی انہیں تسلی دیتے ہوئے چپ کرانے کی کوشش کرتی رہیں۔

سچ ہے کہ اس طرح کی عجیب خبریں، جھوٹے تھمبنیل کوئی مذاق نہیں ہیں کیونکہ ان سے کسی کی ذاتی زندگی تباہ ہو سکتی ہے کسی کے رشتے ٹوٹ سکتے ہیں اور متاثرہ فرد کس قدر متاثر ہو سکتا ہے اس کا صرف گمان ہی کیا جا سکتا ہے۔

  • This is so sad, how could one do this? But this anchor is an idiot raising issue that people cannot see agirl getting fame. It is not girl or boy , there are some people who only know negative and they use it for every one without any differentiation. I think 99% of people who saw this girl had a smile and prayer for this girl, wishing her all teh bests in her future.

  • Yehi deserve krti thi ye batmeez larki is qadar batmeez aur pata nai hum log aise behuda logon ko promote ku krne lag jate hain fazool k content fazool aur cheap logon ko aagy late hain lekin jo deserving hoty unhen koi puchta hi nai
    Day 1st se zehr lag rhi thi mujhe ye bht acha hua is ke sath ab zyda drama ni kre gi behuda owrat

  • It almost felt like the anchor was pushing jer arguments repeatedly to make the girl cry. People trying to get people to like/open their YouTube videos at the expense of this girl is shameful in any society but especially muslim society.


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >