شہلارضا نے جہانگیرترین سے متعلق ٹویٹ ڈیلیٹ کرنیکی وجہ بتادی

شہلارضا نے جہانگیرترین سے متعلق ٹویٹ ڈیلیٹ کرنیکی وجہ بتادی،سوشل میڈیا پر سوالات

کیا پی ٹی آئی سے اختلافات کے بعد جہانگیر ترین پیپلز پارٹی میں شمولیت اختیار کرنے والے ہیں؟ خبریں گردش کرنے لگیں، معاملہ ایسے شروع ہوا کہ پیپلز پارٹی کی سینئر رہنما شہلا رضا نےٹویٹ میں انکشاف کیا کہ جہانگیر ترین نے پیپلز پارٹی کے سینئر رہنما مخدوم احمد محمود سے ملاقات کرلی۔

شہلا رضا نے مزید کہا کہ جہانگیر ترین اگلے ہفتے آصف علی زرداری سے کراچی میں ملاقات کریں گے،خیال ہے کہ جہانگیر ترین اس ملاقات میں پی ٹی آئی چھوڑنے اور ساتھیوں سمیت پی پی پی میں شمولیت اختیار کر لیں گے، اگر واقعی ایسا ہوگیا تو نہ بزدار رہے گا نہ نیازی ہوگا۔

https://twitter.com/SyedaShehlaRaza/status/1379678233512321024/photo/1

جہانگیر ترین نے شہلا رضا کے دعوے کی تردید کی اور ملاقات کو پروپیگنڈا قرار دیا، کہا پیپلز پارٹی میں شمولیت کی خبروں میں کوئی صداقت نہیں،میرے خلاف خبریں چلوانے والوں کو مایوسی ہوگی۔

جس کے بعد صوبائی وزیر نے ٹویٹ ہٹادی،شہیلا نے اپنا ٹویٹ شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ یہ خبر ARYنے نشرکی،ٹویٹ میں خیال اور اگر کے ساتھ تبصرہ کیا ،چینلز ایسے حملہ آور ہوئے،جیسے میں خبر بریک میں کر رہی ہوں،دوسرے چینلز کی مانیٹرنگ بھی نہیں کرتے اور بھی ٹویٹس اس خبر پر کی گئیں، کچھ نہیں تو اردو ہی سمجھ کر پڑھ لیں۔

شہلا رضا کے اس ٹویٹ پر سوالات کئے جانے لگے، شکیل احمد نے لکھا بالکل درست فرمایا آپ نے،لیکن پھر آپ نے ٹوئٹ ڈیلیٹ کیوں کی ؟؟

جس پر شہلا رضا نے جواب دیا کہ تاکہ بعد میں ثبوت کے ساتھ دوبارہ بات رکھو دوں۔

شکیل احمد نے دوبارہ پوچھا میرا مطلب ٹویٹ ڈیلیٹ کر کے ثبوت خود مٹا دیا تھا ۔لیکن آپ نے تو ثبوت خود مٹا دیا ۔

https://twitter.com/shakilahmad1970/status/1379691500724977664https://twitter.com/shakilahmad1970/status/1379691898374389761

ایک صارف نے لکھا کہ شہلا آنٹی فالو بیک ہی دے دو مجھے۔

فیصل پاشا نے کہا کہ ملاقات کا تو کلیئر کٹ آپ نے لکھا،اس میں اگر مگر نہیں۔

جہانگیر ترین ماضی میں وزیراعظم عمران خان کے انتہائی قریبی ساتھی تھے، پاکستان تحریک انصاف کے رہنما جہانگیر ترین کو دسمبر 2017ء میں سپریم کورٹ کی جانب سے پارلیمنٹ کیلئے تاحیات نااہل قرار دیدیا گیا تھا،پی ٹی آئی کے حکومت میں آنے کے بعد 2020میں چینی بحران پیدا ہوا، حکومتی تحقیقات میں اربوں روپے کا فائدہ اٹھانے والوں میں جہانگیر ترین کا بھی نام آیا تھا، جس کے بعد پاکستان تحریک انصاف نے انہیں سائیڈ لائن کردیا تھا۔

دوسری جانب جہانگیر ترین نے تحریک انصاف سے انصاف کی اپیل کردی،انہوں نے کہا کہ میں دوست تھا۔ دشمنی کی طرف کیوں دھکیل رہے ہیں؟ انتقامی کارروائی کیوں ہورہی ہے؟ کیا میری وفاداری کا امتحان لیا جا رہا ہے؟ ظلم بڑھتا جارہا ہے۔۔ کیس شروع ہونے سے پہلے اکاؤنٹس منجمد کردیے گئے ہیں۔

  • this is a tough one . i think jahangir should come clean from this case as practise you are clean before preaching and if he is not clean than let him join the army of money launderers and expose himself and his group to the people of pakistan.khan is not bothered about the consequences


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >