شادی سے متعلق بیان پرملالہ کے والد کی وضاحتیں

نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسفزئی کے والد ضیا الدین یوسفزئی نے دعویٰ کیا ہے کہ شادی سے متعلق ان کی بیٹی کے بیان کو انٹرویو کے سیاق و سباق سے ہٹ کر پیش کیا جا رہا ہے۔

ملالہ نے کہا کہ مجھے ابھی تک سمجھ نہیں آتا کہ لوگوں کو شادی کیوں کرنا ہے؟ اگر آپ اپنی زندگی میں کسی کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں تو نکاح نامے پر دستخط کرنے کی کیا ضرورت ہے؟ صرف پارٹنر بن کر کیوں نہیں رہ سکتے؟

نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسفزئی نے بتایا کہ ان کی والدہ ہمیشہ انہیں شادی کے خوبصورت رشتے کے حوالے سے بتاتی رہتی ہیں، اور ان کے والد کے پاس ایسے لوگوں کی ای میلز آتی ہیں جو انہیں اپنی جائیداد اور پیسوں کے بارے میں بتاکر مجھ سے شادی کرنے کی خواہش کا اظہار کرتے ہیں۔

ملالہ یوسف زئی کا کہنا تھا کہ ان کا فی الحال شادی کا کوئی ارادہ نہیں ہے اور نہ ہی وہ بچے پیدا کرنے کا ارادہ رکھتی ہیں۔

ان کے اس بیان کے بعد سوشل میڈیا صارفین نے انہیں شدید تنقید کا نشانہ بنایا اور کئی صارفین نے یہاں تک کہہ ڈالا کہ وہ خوش ہیں کہ انہوں نے کبھی بھی ملالہ کو پسند نہیں کیا اور ہمارے دعوے درست ثابت ہورہے ہیں کہ ملالہ یوسفزئی غیر ملکی قوتوں کی آلہ کار ہیں۔

اس پر معروف عالم دین مفتی شہاب الدین پوپلزئی نے ملالہ یوسفزئی کے والد سے سوال کیا کہ کل سے سوشل میڈیا پر ایک خبر زیر گردش ہے کہ ان کی بیٹی نے رشتہ ازدواج کو یکسر مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ شادی کرنے سے بہتر ہے کہ پارٹنر شپ کی جائے نہ کہ نکاح۔

مفتی شہاب الدین نے ضیا الدین یوسف زئی کو بتایا تھا کہ مذکورہ خبر کے بعد ہم سب شدید اضطراب میں مبتلا ہیں، آپ اسکی وضاحت فرمادیں۔

مفتی پوپلزئی کے سوال پر ملالہ یوسفزئی کے والد نے جواب دیا کہ محترم مفتی پوپلزئی صاحب ایسی کوئی بات نہیں، میڈیا اور سوشل میڈیا نے ان کی بیٹی کے انٹرویو کی اقتباس کو سیاق و سباق سے ہٹ کر اور تبدیل کرکے اپنی تاویلات کے ساتھ شئیر کیا ہے، اور بس۔

واضح رہے کہ ملالہ یوسفزئی پر تنقید نئی بات نہیں اس سے قبل بھی متعدد مواقعوں پر ملالہ یوسفزئی تنقید کا نشانہ بن چکی ہیں۔ملالہ یوسفزئی کو نوبل انعام ملنے، بیرون ملک جانے پر سوشل میڈیا صارفین متعدد بار سوالات اٹھاچکے ہیں جبکہ سوشل میڈیا صارفین ملالہ پر یہ تنقید بھی کرتے نظر آتے ہیں کہ وہ نہ تو مسئلہ کشمیر کی کھل کر حمایت کرتی ہیں اور نہ ہی فلسطینیوں کے مظالم کی مذمت کرتی ہیں۔

  • Siako sabab kya hai Shadi sy pehly aik dosry ko pasand krna jaiz hai lakin nikah hi na krna bilkul haram relation hai aur iske baap ny kuch wazahat nahi ki bahir mai reh kr banda aisy mahool ka adi ho Jata Mera khayal hai iska pura khaandaan hi islam sy door hai

  • Her father has made a typically political defense of a stupid statement by Malala.
    I read the vogue piece and Malala said exactly what she is quoted to have said. Would have been better for him to stay shut instead


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >