سوشل میڈیا صارفین فردوس عاشق اعوان کے تھپڑ کو کس نظر سے دیکھتے ہیں؟

وزیراعلی پنجاب کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان اور پیپلزپارٹی کے رہنما قادر مندو خیل کے درمیان کرپشن کے الزامات پر نجی چینل کے پروگرام میں تلخ کلامی ہوگئی۔اس دوران تلخ کلامی اتنی بڑھ گئی کہ فردوس عاشق اعوان نے قادر مندوخیل کو تھپڑ ماردیا۔

وائرل ہونیوالی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ فردوس عاشق اعوان اور قادرمندوخیل آپس میں لڑرہے ہیں، فردوس عاشق اعوان انتہائی غصے میں دکھائی دے رہی ہیں، انہوں نے قادرمندوخیل کو گریبان سے پکڑ کر گالی دی اور تھپڑ جڑدیا

جس پر قادرمندوخیل بھی جوابی وار کرنے کی کوشش کرتے ہیں، اسی دوران جاوید چوہدری بھی چیختے نظر آتے ہیں کہ بس کردیں جبکہ ایکسپریس ٹی وی کا سٹاف بھی لڑائی چھڑوانے آتا ہے۔

فردوس عاشق اعوان کے قادر مندوخیل پر تھپڑمارنے پر سوشل میڈیا پر ملاجلا ردعمل دیکھنے کو ملا۔ کسی نے فردوس عاشق اعوان کے تھپڑمارنے کے اقدام کو درست قراردیا تو کسی نے قادرمندوخیل کی حمایت کی لیکن سوشل میڈیا صارفین کی اکثریت نے جاوید چوہدری کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ ریٹنگ حاصل کرنے کیلئے جاوید چوہدری نے جان بوجھ کر لڑوائی کروائی اور ویڈیو بنواتے رہے۔

کچھ سوشل میڈیا صارفین نے کہا کہ قادرمندوخیل نے جو گھٹیا زبان استعمال کی اس پر فردوس عاشق اعوان کا تھپڑ مارنا بالکل صحیح ہے لیکن کچھ سوشل میڈیا صارفین نے فردوس عاشق اعوان کو تنقید کا نشانہ بنایا۔

رضارومی نے لکھا کہ یہ ٹی وی شو ہے یا پاگل خانہ جس کا کوئی وارڈن نہیں۔ عوام کو ہمہ وقت بد تہذیبی کا سبق دیا جاتا ہے اور یہ باور کیا جاتا ہے کہ گفتگو کا یہی طریقہ ہے۔

بلال خان نے جاوید چوہدری پر تنقید کرتے ہوئے لکھا کہ فردوس اور مندوخیل کی لڑائی میں جاوید چوہدری جان بوجھ کر لڑائی کروا کر دور رہ کر ویڈیو بنواتے رہےجاوید چوہدری کم سے کم قادر مندوخیل کو تو پیچھے ہٹاسکتے تھےمگرجاوید چوہدری کو معلوم تھا کہ ویڈیو بن رہی ہے اور وہ بنواتے رہے۔

دیارحمان نے لکھا کہ یوں تو فردوس بھی ہو عاشق بھی ہو اعوان بھی ہو تم سب ہی کچھ ہو بتاؤ کہ پہلوان بھی ہو

صحافی ارم زعیم نے لکھا کہ تنی بدزبانی اور بدتمیز ی شروع ہونے پر میزبان کو شو ہی کینسل کر دینا چاہیے تھا۔ لیکن نہیں ۔۔۔مفت کا مصالحہ مل رہا تھا۔ اُس کے بعد صرف مندوخیل کو پھینٹی پڑھنے والا کلپ شئیر کرنا اور آپا کو پڑھی گالیاں اور غلیظ زبان کو وائرل نا کروانا بھی سمجھ سے باہر ہے۔

فرمان خان نے لکھا کہ جاوید چودھری صاحب جس طرح آپ یا آپ کی ٹیم نے وقفے کے دوران اُس لڑائی کا مخصوص حصہ دکھایا ہے میری گزارش ہے کہ باقی کا حصہ بھی عوام دکھائیں تاکہ معلوم ہو سکے کہ غلطی فردوس عاشق اعوان صاحبہ کی تھی یا قادر مندوخیل نے غلیظ زبان استعمال کی صحافی ہونے کا مظاہرہ کریں لفافی نہیں۔

محمد شاہزیب نے تبصرہ کیا کہ میں فردوس عاشق اعوان کے نہ تھپڑ کی حمایت کرتاہوں اور نہ میں قادر مندوخیل کے رویے کی،کیونکہ یہ انتہائی شرمناک عمل تھا، 22کروڑلوگوں کےسامنےبیٹھ کراگر اپ احباب کا ایسارویہ ہےتو دوسرے اپ سےکیا سیکھیں گے،تمام ترواقعےکی مکمل انکوائری کروائیں اس سےپہلےکچھ کہناقبل ازوقت ہوگا۔

ایک پیروڈی اکاؤنٹ نے مزاحیہ تبصرہ کرتے ہوئے لکھا کہ فردوس عاشق اعوان کی ویڈیو دیکھنے کے بعد، اے سی سیالکوٹ سونیا صدف نے شکرانے کے نفل ادا کیے اور اہل علاقہ میں چاول تقسیم کیے، ذرائع

ایک سوشل میڈیا صارف نے لکھا کہ اس واقعے کے ذمہ دار نہ صرف فردوس عاشق اعوان اور قادرمندوخیل ہیں بلکہ جاوید چوہدری بھی برابر کے ذمہ دار ہیں۔

سالار سلطانزئی نے لکھا کہ کسی بھی خاتون کو یہ کہو کہ اب اپنے پیدا ہونے والے بچے کا الزام بھی ہم پر لگانا تو وہ آگے سے تھپڑ مارےگی اگر اچھے خاندان سے ہو۔ ساتھ میں اگر کوئی غیرتمند مرد کھڑا ہو وہ بھی اس بے غیرت کو دو تین لگائےگا۔ مندوخیل نےپشتون روایات کومٹی میں ملایاہے۔ ڈوب مرناچاہیے!

سعادت یونس نے تبصرہ کیا کہ پپپلزپارٹی کا مندوخیل فردوس عاشق اعوان کو تھپر مار دیتا تو تب بھی بے نظیر ریما عمر سمیت لبرل برگیڈ نے تنقید فردوس عاشق پر کرنی تھی وجہ تحریک انصاف اور عمران خان ہے۔ انکو عمران خان سے بغض اور کینہ ہے

سویرا خان نے لکھا کہ یہ ہے ہمارے سیاستدانوں کی اصل وقات!!!!! عوامی مسائل پر بات کرنے کی بجاۓ ایک دوسرے پر کیچڑ اچھالنا،گالیاں دینا، ہاتھ اٹھانا۔ جو لوگ قادر مندو خیل کو سپورٹ کررہے ہیں لگتا ہے انکے گھر میں عورتوں کو ایسے ہی گالیاں دی جاتی ہیں

  • Aap shayed iss mandokhail ko pehle se nahi jante, Iss insan ke zuban inthaai ghattya hai, aur jo iss ke zubaan per aaey ye bina sochey bhonk deta hai, main Firdous aashiq ka fan nahi magar iss ne jo keeya 100% theak keeya,


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >