پارلیمنٹ میں بدنظمی پر فنکار اور شاہد آفریدی برہم ، شدید ردعمل

گزشتہ دنوں قومی اسمبلی میں بجٹ سے متعلقہ اجلاس کے دوران شدید بدنظمی، تلخ کلامی اور لڑائی جھگڑا دیکھنے میں آیا جس میں نمائندوں نے مقدس ایوان کی حرمت کو پامال کیا اور یہاں گالم کلوچ اور ہلڑبازی کرتے رہے۔ اس واقع کے بعد سوشل میڈیا صارفین سمیت اداکاروں اور کھلاڑیوں کی جانب سے سخت ردعمل کا اظہار کیا گیا ہے۔

اس معاملے پر اداکارہ مریم نفیس نے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر کہا کہ جو کتابیں اچھال اچھال کر پھینکی جارہی تھیں ان پر پاکستان لکھا تھا۔ انہوں نے قائداعظمؒ محمد علی جناح سے معافی مانگتے ہوئے کہا کہ ہم ایک بہت بری قوم ہیں جو آپ کے دیئے ہوئے تحفے (پاکستان) کو یوں برباد کررہے ہیں۔

اداکارہ نے شرمندگی کا اظہار کرتے ہوئے پارلیمنٹ ممبران کو جوکروں اور جانوروں سے بدتر قرار دیا۔
نجی ٹی وی کے پروگرام میں شریک اریبہ حبیب نے اس موضوع پر بات کرتے ہوئے کہا کہ تمام سیاستدان کسی فنیشنگ اسکول میں داخلہ لے لیں، جہاں انہیں تہذیب، بات چیت کا طریقہ اور صبروتحمل سکھایا جائے، بتایا جائے کہ کس طریقے سے پیش آنا ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ سارے سیاستدان ایک جیسے نہیں ہیں اچھے بھی ہیں۔

اسی معاملے پر سابق کپتان شاہد آفریدی نے کہا کہ جو طوفان بدتمیزی برپا کیا گیا اسمبلی میں اور غلیظ زبان اور الفاظ استعمال کئے گئے اس سب کو دیکھ کر سر شرم سے جھک گیا ہے۔ یہ ہیں ہمارے حکمران اور نمائندے؟

سابق کپتان نے مزید کہا کہ یہ لوگ تو ایک دوسرے سے تمیز سے بات نہیں کر سکتے ، ہماری نمائندگی اور ملک کی ترقی کے لیے کیا کام کریں گے؟

لالا نے عوام سے کہا کہ وہ ہوش کے ناخن لیں۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >