مریم نواز کی 2 سال پرانی تصویر شئیر کرکے ”ماموں “بنانے کی کوشش ناکام

مریم نواز کی آرمی چیف جنرل باجوہ کی حمداللہ محب کیساتھ 2 سال پرانی تصویر شئیر کرکے لوگوں کو ‘ماموں’ بنانے کی کوشش ناکام۔۔ سوشل میڈیا صارفین نے حقیقت سے پردہ اٹھادیا

افغان نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر حمداللہ محب نے کچھ عرصہ قبل پاکستان پر سنگین الزامات عائد کرتے ہوئے سخت الفاظ کہے تھے اور پاکستان کو چکلا (قحبہ خانہ)کہا تھا جس پر پاکستان کی طرف سے شدید احتجاج سامنے آیا۔ حمداللہ محب کی گالی کے بعد پاکستان نے آئندہ حمداللہ محب سے کسی قسم کا رابطہ نہ رکھنے کا فیصلہ کیا۔

شاہ محمود قریشی نے حمداللہ محب کے بیان پر ردِعمل دیتے ہوئے کہا تھا کہ ’جب سے آپ نے پاکستان کا موازنہ قحبہ خانے سے کیا ہے میرا خون کھول رہا ہے۔ آپ کو شرم آنی چاہیے اور آپ کو اپنا طرز عمل ٹھیک کرنا ہو گا۔‘

شاہ محمود قریشی نے مزید کہا تھاکہ اب کوئی بھی پاکستانی نہ تو افغان مشیر برائے قومی سلامتی سے بات کرے گا اور نہ ہی ہاتھ ملائے گا۔

نوازشریف کی حمداللہ محب سے ملاقات پر سوشل میڈیا پر بھی سخت ردعمل دیکھنے کو ملا، سوشل میڈیا صارفین کا کہنا تھا کہ جس پاکستان نے آپکو سرآنکھوں پر بٹھایا، آپکو وزیراعظم بنایا، آپ اسی ملک کو گالی دینے والے سے ملاقاتیں کررہے ہیں، کچھ سوشل میڈیا صارفین نے نوازشریف کو "الطاف حسین ثانی” بھی قراردیا۔

مریم نواز نے جب سوشل میڈیا صارفین کی طرف سے سخت ری ایکشن دیکھا تو نوازشریف کے دفاع میں سامنے آگئیں اور جنرل باجوہ کی 2 سال پرانی یعنی مئی 2019 کی تصویر شئیر کرکے ملاقات کو جسٹی فائی کرنیکی کوشش کرتی رہیں جب حمداللہ محب نے پاکستان کو گالی نہیں دی تھی۔

مریم نواز نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں کہا کہ اپنے پڑوسیوں کے ساتھ پاکستان کا پرامن تعلقات نواز شریف کے نظریہ کی بنیاد ہے جس کے لئے انہوں نے انتھک محنت کی ہے۔

مریم نواز نے مزید لکھا کہ یہ سب کے ساتھ بات کرنا ، ان کے نقطہ نظر کو سننے اور اپنے آپ کو ایک ہی پیغام پہنچانا سفارتکاری کا بہت اہم جز ہے۔ اس حکومت کو کچھ سمجھ نہیں آرہا ہے اور اسی لئے یہ خارجہ پالیسی کے محاذ پر مکمل طور پر ناکام ہے۔

ملاقات کو جسٹی فائی کرنے کیلئے مریم نواز نے نوازشریف کی حمداللہ محب اور آرمی چیف کی حمداللہ محب کے ساتھ تصاویر شئیر کرتے ہوئے لکھا کہ دونوں تصاویر اچھی نہیں لگ رہیں؟

لیکن مریم نواز کی جسٹی فائی کرنے کی کووشش اس وقت ناکام ہوگئی جب سوشل میڈیا صارفین نے جنرل باجوہ کی حمداللہ محب کیساتھ تصویر کی حقیقت بتائی۔ سوشل میڈیا صارفین کا کہنا تھا کہ یہ تصویر مئی 2019 کی ہے ، اس وقت اس شخص نے پاکستان کو گالی نہیں دی تھی۔سوشل میڈیا صارفین کا کہنا تھا کہ مریم نواز ایسے ہی کام کرکے اپنے سپورٹرز کو بیوقوف بنانے کی کوشش کرتی ہیں لیکن جلد ہی پکڑی جاتی ہیں۔

جنید نامی سوشل میڈیا صارف نے مریم کوجواب دیا کہ باجوہ اس وقت ملا جب حمد اللہ محب نے "جرم” کا ارتکاب نہیں کیا تھا ۔ نواز شریف اس وقت ملا جب وہ "جرم” کا ارتکاب کر چکا تھا ۔ یہ اصل نکتہ ہے جو تمہارے Low IQ کے سپورٹرز کو سمجھ نہیں آ سکتا اور اسی کا فائدہ اٹھا کر تم لوگ غداری کرتے ہو

عمیر ثاقب کا کہنا تھا کہ یہ تو ایسے ہی ہوگیا کہ ایک قاتل ریپسٹ کو اسکا جرم کرنے سے پہلے اور اسکا جرم کرنے کے بعد ایک جیسا سمجھا جائے مطلب اس حرامی افغانی نے ہیرامنڈی کہا اتنا بڑا جرم کیا تو اس کو اس کی پرانی تصویر جب اس نے جرم نہیں کیا ہواتھا ملا کر نواز شریف کو ہی حرامی ثابت کررہی ہو

شبیر خان نے لکھا کہ مریم بی بی آپ لاکھ کوشش کر لیں، فضول ہے ۔ باجوہ صاحب کی ملاقات تب ہوئی تھی جب اس ذلیل نے پاکستان کو گالی نہیں دی ۔ میاں نے تب خوش ہوکر خوش آمدید کہا جب اس نے پاکستان کے خلاف بکواس کی

فیضان رزاق کا کہنا تھا کہ ایک بندہ سزا افتہ ہے، عدالتوں نے اس کو مجرم ثابت ہونے پر نااہل قرار دیا،وہ ہی عدالتیں جنہیں وہ کبھی استعمال کیا کرتا تھا، دوسری تصویر میں ملک کا آرمی چیف ہے جسے ایکسٹینشن پہلی تصویر میں نظر آنیوالے مجرم نے دی اس میں تفریق جب ہی نظر ائے گی جب انکھوں سے مفادات کی عینق اترے گی۔

ایک اور سوشل میڈیا صارف کا کہنا تھا کہ دونوں تصویروں میں کافی فرق ہے ایک دو سال پہلے کی ہے جب پنجابیوں کو گالیاں نہیں پڑی تھیں اور تیرے باپ کیساتھ گالیوں کے بعد ملاقات کی

وسیم کا کہنا تھا کہ سانپ جو ساری زندگی دودھ پلاؤ وہ ، موقع ملنے پر ڈسنے سے باز نہیں اتا۔ نواز شریف اور اس کا خاندان وہی سانپ ہے جن کے خون میں شامل ہے کہ وہ ملک دشمنوں کے ساتھ مل کر پاکستان کو نقصان پہنچائیں

  • Maryam aik thakki hoi raqqasa jaisi he, jiske purane thumke ab koi nahiu dekhna chahta.
    Do takke ki huti beghairat aurat he, jiska level kothe pe bethi gandi naika se zyada nahi. Ye apna jism kya, apna zameer, ghairat sab kucgh bech chukke hein, aur wo dunyavi takko ki khatir. Ye itne chote aur ghatya log hein, jo bohot saste hein.

  • Oh baivkoofon key sardar begum Safder! Aap ka abba convicted criminal hai, absconder from justice hai, us key haiseeat kiya hai sawai is k, k woh aik nasha hai Maraym Aurangzaib k leeyay??
    Diplomacy or baigharatee ka farak to pata naheen or cahlee hai politcs kernai!
    Pehlay Rana ana Ullah say to muafee mangva lo jo us nay tumharay ot tumharee maan k baray main kaha thaa!

  • نواز شریف نے اس ملاقات میں اپنی صحت یابی کی دعا کروائی اوراپنی پرانی قبض اور
    ! بواسیر کے لئے افغانی مجرب نسخے بھی حاصل کئے . بات کا بتنگڑ نہ بنائیں


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >