ترک یوٹیوبر کا انوکھا کام ، مداحوں سے کیے وعدے پر خود کو قبر میں دفن کر لیا

سوشل میڈیا پر مشہور ہونا اب تقریباً ہر کسی کا خواب ہے اور لوگ اس کے لیے اکثر عجیب و غریب حرکات کرتے نظر بھی آتے ہیں، کوئی اس کیلئے روپے پیسے یا اسلحہ کی نمائش کرتا ہے تو کوئی کسی انہونی کو کر کے دکھاتا ہے جس کے بعد ایسے لوگوں کو سوشل میڈیا صارفین پذیرائی دیتے ہیں۔

مگر ترکی سے تعلق رکھنے والے ایک یوٹیوبر محمدبہجیجک نے یوٹیوب پر لائک، ویوز اور سبسکرائبرز کی تعداد میں اضافے کی خاطر انتہائی قدم اٹھا دیا، اس یوٹیوبر نے خود کو 6 گھنٹے کیلئے قبر میں دفن کر لیا۔ اگر کہا جائے کہ اس نے اس مقصد کیلئے سب حدیں پار کر لی ہیں تو یہ بے جا نہ ہو گا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق 25 سالہ ترک یوٹیوبر نے اپنی ایک گزشتہ ویڈیو میں مداحوں سے وعدہ کیا تھا کہ اگر اس کے 4 لاکھ سبسکرائبر ہو جائیں گے تو وہ کود کو قبر میں دفن کرنے جیسا ناممکن لگنے والا اسٹنٹ کر کے دکھائے گا۔

محمد بہجیجک نے اس اسٹنٹ کیلئے خصوصی طور پر ایک تابوت بنوایا جس کی دیواریں شیشے کی بنی تھیں۔ ان میں سے آرپار نظر آ سکتا تھا۔ یہ تابوت 20 ہزار ترک لیرا کی لاگت سے تیار کیا گیا تھا۔ اس تابوت میں لیٹ کر یوٹیوبر نے خود کو 6 گھنٹے تک قبر میں مدفون کر لیا۔

اس اسٹنٹ کے دوران اس جگہ پر ایمبولنس اور ڈاکٹر بھی موجود تھا جو کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے تیار تھے۔ حیران کن طور پر جب اس نوجوان کو قبر سے نکالا گیا تو وہ بالکل ٹھیک تھا۔

یوٹیوبر نے اپنے اس اسٹنٹ کی ویڈیو معروف ویڈیو شیئرنگ پلیٹ فارم پر جاری کی جسے بہت پذیرائی مل رہی ہے اور ویڈیو دیکھتے ہی دیکھتے وائرل ہو گئی ہے۔


Featured Content⭐


24 گھنٹوں کے دوران 🔥


From Our Blogs in last 24 hours 🔥


>