’ایلفی پاؤ، الیکشن کمیشن مکاؤ‘ سوشل میڈیا پر ٹاپ ٹرینڈ کیوں ہے؟

گزشتہ روز الیکشن کمیشن نے بیان دیا کہ ووٹنگ مشین سے چھیڑ چھاڑ کی جاسکتی ہے اور اس کا سافٹ ویئر آسانی سے تبدیل کیا جا سکتا ہے۔ یہ یقینی بنانا تقریباً ناممکن ہے کہ ہر مشین ایمانداری سے کام کرسکے۔

الیکشن کمیشن کا کہنا تھا کہ نہ تو عملہ تربیت یافتہ ہے اور نہ ہی عوام اتنے پڑھے لکھے ہیں کہ مشین استعمال کرسکیں۔ بٹن میں ایلفی ڈال کر الیکٹرانک ووٹنگ مشین کو غیرفعال کیا جاسکتا ہے۔

الیکشن کمیشن کے اس جواب پر سوشل میڈیا صارفین نے دلچسپ تبصرے کئے اور میمز بناکر شئیر کیں اور سوشل میڈیا پر "ایلفی پاؤ، الیکشن کمیشن مکاؤ” کے نام سے ایک ٹاپ ٹرینڈ بھی بن گیا۔

سوشل میڈیا صارفین نے میمز اور تبصرے کرتے ہوئے کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن میں ایسے کونسے دماغ ہیں جو ایسی دلیلیں سامنے لاتے ہیں، کروڑوں پاکستانی ٹچ موبائل استعمال کرتے ہیں لیکن انہیں ووٹ ڈالنا نہیں آتا، یہ کونسی منطق ہے؟ سوشل میڈیا صارفین نے یہ بھی کہا کہ الیکشن کمیشن نے ندایاسر کو بھی پیچھے چھوڑدیا ہے۔

سوشل میڈیا صارفین نے طنزیہ انداز میں ای وی ایم کے بغیر ووٹنگ کے فوائد بھی گنوائے اور کہا کہ اگر الیکٹرانک ووٹنگ مشین نہ ہو تو مرے ہوئے لوگوں کے ووٹ کاسٹ کئے جاسکتے ہیں، اضافی بیلٹ پیپرز نکال کر ٹھپے لگائے جاسکتے ہیں، آپکا ووٹ کوئی اور ڈال سکتا ہے، ایک بندہ ایک سے زیادہ ووٹ ڈال سکتا ہے، پولنگ اسٹیشن پر دنگا فساد کرکے ووٹنگ روکی جاسکتی ہے

ملیحہ ہاشمی نے تبصرہ کیا کہ ماشااللّه، جو قوم مردہ لوگوں کےنام پر بھی دس ووٹ ڈال آتی ہے، بریانی ملتےہی پورے محلے کا ووٹ پکا، مشین استعمال کرنا انکےلئےحلوہ ہے دماغ سے ایلفی نکال کر سوچیں۔ شکریہ

ایک سوشل میڈیا صارف نے تبصرہ کیا کہ عملہ اور عوام اتنے جاہل ہیں کہ کمپیوٹر، لیپ ٹاپ، آئی فون ، android استعمال کر سکتے ہیں لیکن ووٹنگ مشین استعمال نہیں کر سکیں گے۔

صوبیہ شیر اعوان نے طنز کیا کہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین سے ووٹ ڈالتے ہوئے ووٹر کو کرنٹ بھی لگ سکتا ہے

طارق نے تبصرہ کیا کہ لیکشن کمیشن کو اتنے اعتراض لکھنے کی بجائے ایک فل اور فائنل بات لکھنی چاہیے تھی۔ "ٹیکنالوجی ایجاد اے کافراں دی مسلماناں واسطے حرام”

آفاق نے تبصرہ کیا کہ لیکشن کمیشن کی بونگیاں سن اندازہ ہوتا ہے کہ ندا یاسر تو بہت ذہین ہے۔

سالار سلطانزئی نے لکھا کہ فارمولا کار، ایلفی، بچی کےسر پہ دوپٹہ؛ قوم جگتوں، حماقتوں اور بےسروپا مباحثوں سے نکل ہی نہیں رہی۔

رانا عمر نے لکھا کہ پاکستان میں 8 کروڑ ووٹرز ہیں لیکن 12 کروڑ ٹچ موبائل پھر بھی الیکشن کمیشن کہتا ہے کہ عوام اتنے پڑھے نہیں کہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین استعمال کرسکیں۔

شمس خان نے تبصرہ کیا کہ ایلفی ڈال کر ای وی ایم غیرفعال کرنےوالی تھیوری بہرحال "زیادہ بارش آتا ہےتوزیادہ پانی آتاہے” سےکہیں جدیدہے اب آپ بھی الیکٹرونکس پروڈکٹس خریدنےسےپرہیز کریں۔

دیگر سوشل میڈیا صارفین نے بھی دلچسپ میمز شئیر کیں اور تبصرے کئے۔

  • بالکل صیح دلیل ہے۔الیکشن کمیشن کے پاس جو گاڑیاں ہیں۔موبائل فون ہیں انکو فورا واپس لے لینا چاہیے۔کسی نے ایلفی ڈال دی تو گاڑیاں خراب ہو جائیں گی۔انکو آنے جانے کیلیے گدھے فراہم کئے جائیں۔اور کمپیوٹر کی بجاے تختی دی جاے۔ورنہ کمپیوٹر میں بھی کوی ایلفی ڈال سکتا ہے۔ ان سے انڈرائیڈ فون لے کے ان جہلاء کو رقعے لکھنے کیلئے صفحے دئیے جائیں۔۔۔
    ایسے جہلاء تو بھارت میں بھی نہیں، وہاں بھی ای وی اہم مشینز الیکٹرانک ووٹنگ کیلئے استعمال ہوتی ہے 🙏🙏۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >