اولمپک کوالیفائر پاکستانی گھڑ سوار عثمان خان حادثے میں شدید زخمی،گھوڑا ہلاک

 

اولمپک کوالیفائر پاکستانی گھڑ سوار عثمان خان حادثے میں شدید زخمی،گھوڑا ہلاک

ٹوکیو اولمپک کوالیفائر پاکستان کے گھڑ سوار عثمان خان حادثے میں شدید زخمی ہو گئے۔

تفصیلات کے مطابق اتوار کو آسٹریلیا میں ہونیوالے ٹوکیو اولمپک گیمز کوالیفائرز میں  پاکستانی گھڑ سوار عثمان خان ایک سنگین حادثے میں شدید زخمی ہوگئے اور ان کا گھوڑا ”  کشیر” ہلاک ہوگیا۔

عثمان کو متعدد بیرونی اور اندرونی چوٹیں آئیں، اندرونی چوٹوں سے خون بہنے کے بعد ان کی نگرانی کی جارہی ہے۔ ڈاکٹرز کے مطابق حادثے کے نتیجے میں عثمان کو پسلی میں شدید چوٹیں آئیں جس کے باعث وہ فی الحال ٹھیک طرح بولنے سے قاصر ہیں۔

حادثے کے بعد ایکوسٹرین مقابلوں میں پاکستان کے ٹاپ ایتھلیٹ عثمان خان نے کہا کہ ابھی میں زندہ ہوں اور پاکستان کی اولمپکس میں جانے کی امید بھی زندہ ہے۔

عثمان نے بتایا کہ پانچ میں سے تین راؤنڈز مکمل ہوچکے تھے اور چوتھے میں وہ تقریباً کامیابی کے قریب پہنچ گئے تھے لیکن حادثے کا شکار ہوگئے اگر ایسا نہ ہوتا تو موجودہ صورتحال پر پاکستان کی شاید چار راونڈز پر ہی جگہ کنفرم ہوجاتی۔

اولمپک کوالیفائر پاکستانی گھڑ سوار عثمان خان حادثے میں شدید زخمی،گھوڑا ہلاک

پاکستان کے واحد فور اسٹار رائیڈر نے اپنے  گھوڑے آزاد کشمیر کے ساتھ ٹوکیو گیمز میں "ایونٹنگ ” کیلئے کوالیفائی کرلیا تھا مگر گیمز مؤخر ہوں گئیں اور ستمبر 2020 میں عثمان کے ساتھی گھوڑے "آزاد کشمیر” کی موت واقع ہوگئی۔

گھڑ سواری کے مقابلوں میں رائیڈر اور گھوڑا ایک ٹیم کے طور پر شرکت کرتے ہیں۔ گھوڑے آزاد کشمیر کی موت کی وجہ سے عثمان خان کو دوبارہ کوالیفائنگ ایونٹ میں شرکت کرنا پڑی۔ اس بار انہیں کوالیفائی کرنے کیلئے 12 کی بجاے صرف 5ایم ای آر راؤنڈز کرنا تھے۔ اسی مقصد کیلئے وہ اپنے نئے گھوڑے کشیر کے ساتھ میدان میں اترے مگر بدقسمتی سے حادثے کا شکار ہو گئے اور اب انہیں کوالیفائی کرنے کیلئے 21 جون سے پہلے نئے گھوڑے کے ساتھ میدان میں اترنا ہو گا۔

دوسری جانب صدر پاکستان ایکسٹرین فیڈریشن ڈاکٹر فاروق احمد نے کہا کہ عثمان خان قومی ہیرو ہے ، ان کے ساتھ رابطے میں ہیں، مستقبل کی حکمت عملی عثمان اور ان کی فیملی کے ساتھ مل کر طے کریں گے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >