امریکا میں پولیس کے ہاتھوں سیاہ فام شہری کی ہلاکت پر کرس گیل بھی بول پڑے

امریکا میں پولیس کے ہاتھوں سیاہ فام شہری کی ہلاکت پر کرس گیل بھی بول پڑے

ویسٹ انڈیز کے لیجنڈ بلے باز کرس گیل نے امریکا میں پولیس کے ہاتھوں سیاہ فام شہری کی ہلاکت کے معاملے پر سیاہ فاموں کی حمایت میں آواز اٹھاتے ہوئے کہا کہ باقی لوگوں کی زندگی کی طرح سیاہ فاموں کی زندگی بھی اہمیت رکھتی ہے۔

اپنے ٹوئٹر پیغام میں کرس گیل نے انکشاف کرتے ہوئے کہا کہ انہیں بھی دنیا بھر میں سیاہ فام ہونے کی وجہ سے نسل پرستانہ جملوں کا سامنا کرنا پڑا۔ نسل پرستی صرف فٹبال ہی نہیں بلکہ کرکٹ میں بھی ہے۔

کرس گیل کا مزید کہنا تھا کہ سیاہ فام لوگوں کو بے وقوف سمجھنا چھوڑ دیں،

کرس گیل کا مزید کہنا تھا کہ ٹیموں میں خود اپنے بارے میں بلیک طاقتور، بلیک مغرور جیسے الفاظ سنے ہیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل ویسٹ انڈیز کے کرکٹر ڈیرن سیمی نے آئی سی سی سے اپیل کی تھی کہ امریکا میں جاری نسل پرستی اور اس کےنتیجے میں ہونے والے نقصان کے خلاف بولیں۔ امریکہ میں پولیس کے ہاتھوں افریقی امریکی شخص جارج فلائیڈ کی ہلاکت کے بعد منظر عام پر آنے والے نسلی حملوں کی مذمت کرنے کے لئے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل سمیت دیگر تمام کرکٹ بورڈ سے آواز اٹھانے کی اپیل کی۔

ڈیرین سیمی نے ایک اور ٹویٹ میں سیاہ فام افراد کے حق میں چلنے والی تحریک کی حمایت کی اور لوگوں کو اس تبدیلی کا حصہ بننے کیلئے بھی کہا۔

واضح رہے کہ مینیا پولس کے علاقے میں جارج فلائیڈ نامی سیاہ فام امریکی شخص کی پولیس اہلکار کے ہاتھوں ہلاکت کے بعد امریکہ میں جگہ جگہ مظاہرے ہو رہے ہیں۔

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More