مجھے اور پریرا کو آئی پی ایل میں "کالو” کہہ کر پکارا جاتا تھا، ڈیرن سیمی کا انکشاف

مجھے اور پریرا کو آئی پی ایل کھیلتے ہوئے "کالو” کہہ کر پکارا جاتا تھا، ڈیرن سیمی کا انکشاف

تفصیلات کے مطابق ویسٹ انڈیز اور پاکستان کی اعزازی شہریت حاصل کرنے والے ڈیرن سیمی نے اپنی انسٹا گرام سٹوری میں انکشاف کیا کہ بھارت میں آئی پی ایل میں سن رائز حیدرآباد کی جانب سے کھیلتے ہوئے نسلی تعصب کی بنیاد پر ان کو اور  تھیسارا پریرا کو "کالو” کہہ کر پکارا جاتا تھا۔

 

ڈیرن سیمی نے اپنی انسٹاگرام سٹوری میں انکشاف کرتے ہوئے لکھا کہ شروع میں مجھے ایسا لگتا تھا کہ "کالو” کا مطلب طاقتور گھوڑے کے ہیں، لیکن اب مجھے اس کے اصل معنی کا علم ہوا ہے جس پر مجھے شدید غصہ ہے۔

اس سے قبل  ویسٹ انڈین کھلاڑی ڈیرن سیمی نے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل اور دیگر کرکٹ بورڈز سے امریکہ میں ساہ فام  شخص کے پولیس کاے ہاتھوں قتل کے بعد امریکہ میں نسلی تعصب کی بنیاد پر جاری مظالم اور تشدد کے خلاف آواز اٹھانے کا مطالبہ کیا تھا۔

 

OR comment as anonymous below

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے


24 گھنٹوں کے دوران 🔥

View More

From Our Blogs in last 24 hours 🔥

View More