محمد رضوان کی تعریف کرنے پر سکندربخت غصہ میں آگئے اور لڑپڑے

کرکٹ اینالسٹ عالیہ رشید کی جانب سے محمد رضوان کی تعریف کرنے پر سکندر بخت غصہ میں آگئے اور عالیہ رشید سے الجھ پڑے۔

نجی ٹی وی چینل کے شو میں سکندربخت نے سرفرازاحمد کو نہ کھلانے اور انہیں بارہویں کھلاڑی کے طور پر بھیجنے کا غصہ نکالا تو کرکٹ اینالسٹ نے سکندر بخت سے مخاطب ہوتے ہوئے کہا کہ آپ محمد رضوان کی تعریف کرنے کی بجائے سرفرازاحمد پر پروگرام کرتے رہتے ہیں جس پر سکندر بخش نے پوچھا کہ رضوان نے کیا پرفارمنس دی ہے؟

جس پر عالیہ رشید نے کہا کہ محمدرضوان نے وکٹ کیپنگ بہت اچھی کی ہے۔ دنیا کے بڑے بڑے کمنٹیٹرز انکی تعریفیں کررہے ہیں، جس پر سکندربخت نے کہا کہ تعریفیں تو بابراعظم کی بھی ہورہی ہیں، ناصر حسین بھی تعریفیں کررہا ہے ، میں نے اس وقت کہا تھا کہ بابراعظم پہلے رنز کرے پھر بات کریں۔ وہ پچاس، 100 رنز تو کرتا نہیں ہے، میں بابراعظم کی تب تعریف کروں گا جب وہ 50 سے 100 اور 100 سے 150 کرے گا۔

عالیہ رشید نے کہا کہ آپ روز سرفرازاحمد کو لیکر بیٹھ جاتے ہیں، سرفراز قومی ٹیم کے کپتان رہے ہیں، انہوں نے اپنا وقت انجوائے کیا ہے لیکن رضوان جو اچھی پرفارمنس دے رہا ہے اسے کسی نے ہائی لائٹ نہیں کیا۔

عالیہ رشید نے کہا کہ اگر آپ کو پلیٹ فارم ملا ہے تو آپ ایمانداری سے بات کریں جس پر سکندربخت غصے میں آگئے اور کہا کہ کیا میں بے ایمانی کررہا ہوں؟ آپ اپنے الفاظ واپس لیں۔

عالیہ رشید سے بدتمیزی سے بات کرنے پر سوشل میڈیا صارفین نے سخت ردعمل کا اظہار کیا اور سوال کیا کہ سکندربخت بڑے تجزیہ کاربنے پھرتے ہیں لیکن جب وہ کرکٹ کھیلتے تھے تو انکی اپنی کارکردگی کیا تھی؟ واضح رہے کہ سکندربخت نے 27 ون ڈے کھیل کر 33 وکٹیں حاصل کررکھی ہیں اور 26 ٹیسٹ کھیل کر 45 اننگ میں 67 وکٹیں حاصل کررکھی ہیں۔

سوشل میڈیا صارفین کا کہنا تھا کہ سکندربخت کا اپنا ریکارڈ اتنا متاثر کن نہیں کہ وہ بابراعظم اور محمدرضوان پر تنقید کرتے پھریں، سرفرازاحمد نے کرکٹ کھیلی ہے کیا وہ ہر میچ میں سنچری اور نصف سنچری کرتے رہے ؟ کیا سرفراز پاکستان کو ہر میچ جتواتے رہے؟

  • سچی بات یہ ہے کہ رضوان کی بھی کوئی پرفارمنس نہیں ہے انٹر نیشنل کرکٹ میں۔وہ نہ تو مضبوط اعصاب کا مالک ہے اور نہ ہی میچ جتوانے کی صلاحیت رکھتا ہے یہی المیہ سرفراز احمد کا بھی ہے۔کراچی سے تعلق رکھنے والے کچھ سابق کرکٹر ز ہر مسئلے کو کراچی لاہور کے تناظر میں دیکھنے کے عادی ہیں جبکہ حقیقت یہ ہے کہ سرفراز کو بے پناہ مواقع ملے مگر وہ بھی ایک اوسط درجے کا بزدل کھلاڑی اور کپتان ہی ثابت ہوا۔پاکستان کو فتح گر کھلاڑیوں اور جارح کپتان کی ضرورت ہے جو بد قسمتی سے آپ کے پاس نہیں ہیں۔

    • yup you are rite…he is a coward person…….Thats why first time in History, we were able to beat India in a mega event, in a final match, to win champions trophy……..yup he is coward as hell

  • Sikander Bakhat thinks Babar Azam hasn’t been making runs ? What ? How did he become an expert ? He also didn’t know if it was Nasir Hussain or Nasir Ali ? 🙂 Send both Sirfraz and Sikander Bakhat home.

  • Siko is right, geo ky har sports analyst ny kisi na kisi ek player se paisy pakdy hoty hn uski mashhori aur full time tat*ty chukny k lye, abi ye aalia anty ho he lo full tatty chuk rai hai ek below avg player k….. Nice ye business b bura nai tatty chukko aur paisa banao

  • All pakistani batsman cannot take stress of any match except javed miandad and great imran khan. All crucial times they fail guranteed and dissapoint the fans. I recomend first they practise then mentally prepare themselves with dua and face the situation. Batsmen cannot be a pussy cat. Pakistani bowlers always help the match with so much hard work then our batsmen become number one pussycats and pakistan sadly loose the match.

  • Sikandar Bakht ya Bud Bukht ? No need to be in conflict with a guest … lady is right what does Sikandar want for Sarefraz ? to lable him as Imran Khan ? he has served team ,enjoyed all positions , now we should appreciate youngsters …i am sorry but was Sikandar’s contribution to cricket ??? not that much impressive .


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >