یاسر شاہ کے خلاف نازیبا زبان پر باپ نے بیٹے پر جرمانہ عائد کردیا

پاکستانی لیگ اسپنر یاسر شاہ کے خلاف نازیبا زبان استعمال کرنے پر باپ نے بیٹے پر جرمانہ کردیا۔

پاکستان کیخلاف پہلے ٹیسٹ میں نامناسب زبان استعمال کرنے پر انگلش فاسٹ بولر اسٹورٹ براڈ پر انکے والد اور پہلے ٹیسٹ کے میچ ریفری کرس براڈ نے 15 فیصد میچ فیس جرمانہ کردیا۔اسکے علاوہ ایک منفی پوائنٹ بھی ڈسپلنری ریکارڈ میں ڈالا گیا۔

پاکستان کی دوسری اننگز کے 46 ویں اوور میں یاسر شاہ کو آؤٹ کرنے کے بعد اسٹورٹ براڈ نے نازیبا زبان کا استعمال کیا تو اسٹورٹ نے غلطی تسلیم کرلی جس پر باقاعدہ سماعت کی ضرورت محسوس نہیں ہوئی۔

کرس براڈ انگلینڈ کی کرکٹ ٹیم کے سابق بلے باز ہیں اور اب وہ آئی سی سی کے میچ ریفری کی ایلیٹ فہرست میں شامل ہیں جبکہ ان کے بیٹے طویل عرصے سے ٹیم کا حصہ ہیں۔وہ انگلینڈ کی طرف سے 25 ٹیسٹ اور 34 ون ڈے میچز میں انگلینڈ کی نمائندگی کرچکے ہیں۔

برطانوی میڈیا کے مطابق کرس براڈ عام طور پر ان میچوں میں اپنے فرائض انجام نہیں دیتے جس میں ان کا بیٹا کھیل رہا ہو لیکن دنیا بھر میں کورونا وائرس کے باعث عائد سفری پابندیوں کے نتیجے میں کرس براڈ کو انگلینڈ کے ایمپائرز کے پینل میں شامل کیا گیااور وہ تین میچوں کی سیریز میں ریفری ہوں گے۔

یاد رہے کہ اس سے قبل براڈ نے اپنے ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ کرس براڈ میرے والد ضرور ہیں مگر وہ بطور میچ ریفری اپنی ذمہ داری ادا کریں گے،اگر میں یا کوئی اور غلطی کرے گا تو وہ صرف قوانین کی جانب دیکھیں گے۔

  • یہی وجہ ہے ان قوموں کی ترقی اور سربلندی کی کہ انصاف کرتے ہیں
    پاکستان میں ایک جنرل کے بیٹے نے ایک لیڈی ڈاکٹر کو گھر نہ آنے پر ریپ کردیا تھا اور ساری مشرف الیون اس خبیث کو بچانے کیلئے یوں میدان میں اتر آی جیسے وہ کشمیر فتح کرکے آیا ہو


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >