بھارتی کرکٹر محمد سراج کو آسٹریلیا میں نسلی تعصب کا سامنا،وارنر نے معافی مانگ لی

بھارتی کرکٹر محمد سراج کو آسٹریلیا میں نسلی تعصب کا سامنا،وارنر نے معافی مانگ لی

بھارتی کرکٹ ٹیم میں شامل مسلمان کھلاڑی محمد سراج کو آسٹریلیا میں نسلی تعصب کا سامنا، ڈیوڈ وارنر نے معافی مانگ لی

غیر ملکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق بھارتی کرکٹ ٹیم میں شامل مسلمان کھلاڑی محمد سراج کو آسٹریلیا میں سڈنی ٹیسٹ کے تیسرے روز تماشائیوں کی جانب سے نسلی تعصب پر مبنی جملوں کا سامنا کرنا پڑا، جس کی آسٹریلین کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی ڈیوڈ  وارنر نے شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے معافی مانگی ہے۔

ڈیوڈ وارنر کا سماجی رابطوں کی ویب سائٹ انسٹاگرام پر اپنے ایک پیغام میں لکھا کہ "میں محمد سراج سے معافی مانگنا چاہتا ہوں کیونکہ نسل پرستانہ جملے کسی بھی طرح اور کہیں بھی قابلِ قبول نہیں ہے” انہوں نے اپنے انسٹاگرام کے پیغام میں گراؤنڈ میں موجود شائقین کرکٹ سے بھی میچ کے دوران اپنا رویہ مثبت رکھنے کی اپیل کی ہے۔

واضح رہے کہ بھارتی کرکٹ ٹیم جو آجکل آسٹریلیا میں بطورمہمان ٹیسٹ میچز کی سیریز کھیلنے کے لیے موجود ہے، بھارتی کرکٹ ٹیم سکواڈ میں شامل مسلمان کھلاڑی محمد سراج کو دوران فیلڈنگ شائقین کرکٹ کی جانب سے نسلی تعصب پر مبنی جملوں کا سامنا کرنا پڑا تھا۔تھا۔

بعد ازاں محمد سراج نے اس پورے واقعے کے حوالے سے فوری طور پر اپنے کپتان اجنکیا ریہانے کو آگاہ کیا جنہوں نے فوراً فیلڈ میں موجودہ امپائر کے پاس جا کر پورا واقعہ رپورٹ کروایا، قبل ازیں فیلڈ امپائر نے آسٹریلیا کرکٹ بورڈ کے اعلیٰ حکام کو بھی بھارتی کھلاڑی محمد سراج پر کسے گئے تعصب پر مبنی جملوں سے آگاہ کیا۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >