بابر اعظم بمقابلہ ویرات کوہلی، دونوں کے اعدادوشمار کیا کہتے ہیں؟

سابق کرکٹرعاقب جاوید نے اپنے حالیہ دئیے گئے انٹرویو میں بابر اعظم کی تکنیک کو ویرات کوہلی سے بہتر قرار دے دیا کہا کہ بابر اعظم کا ون ڈے رینکنگ میں ٹاپ پر آنا ثابت کرتا ہے کہ ان کی تکنیک ویرات کوہلی سے بہتر ہے، بھارتی کپتان کے پاس اسٹروکس زیادہ اور فٹنس بھی بہتر ہے، مگر آف اسٹمپ پر سوئنگ بال ان کی کمزوری ہے، انھیں چاہیے کہ بابر اعظم کو فالو کریں، بابر کو فٹنس مزید بہتر بنانے کے لیے ویرات کوہلی کی تقلید کرنا چاہیے۔

عاقب جاوید نے کہا کہ بابر اعظم پاکستان ٹیم میں ریڑھ کی ہڈی جیسی حیثیت رکھتے اور تسلسل سے پرفارم کررہے ہیں،وہ جلد تمام فارمیٹ میں آگے نکل جائیں گے،میری خواہش ہے کہ پاکستان کو بابرجیسے 2،3مزید کرکٹرز مل جائیں۔

کیا واقعی بابر اعظم ویرات کوہلی سے بہتر کھلاڑی ہیں؟ تھوڑا سٹیٹ کو دیکھ لیتے ہیں

ویرات  اب تک 86 ٹیسٹ،248 ون ڈے،82 ٹی ٹونٹی کھیل چکے ہیں۔ ان کے نمبر 1 بیٹسمین رہنے کی وجہ یہ تھی کیوں کہ تینوں فارمیٹ میں ان کی ایورج 50 سے اوپر ہے ۔

بابر اعظم  اب تک 29 ٹیسٹ،77 ون ڈے اور 44 ٹی ٹونٹی کھیل چکے ہیں یعنی کہ ویرات کوہلی کے مقابلے میں انہوں نے بہت ہی کم میچ کھیلے ہیں ۔ ان کی ون ڈے اور ٹی ٹونٹی میں تو ایورج 50 سے اوپر ہے لیکن ٹیسٹ میں ان کی ایورج 45.44 ہے۔

اب ان دونوں کا پچھلے 2 سالوں کے میچوں کا موازنہ کرتے ہیں ۔

پچھلے 2 سالوں میں بابراعظم نے ون ڈے میچوں میں 65 کی ایورج سے 4 سینچریز کے ساتھ 1313 رنز بنائے ۔ جب کہ ویرات کوہلی نے پچھلے 2 سال کے ون ڈے میچز میں 56 کی ایورج سے 5 سینچریز کے ساتھ 1635 رنز بنائے ۔

اب آ جاتے ہیں پچھلے 2 سالوں میں کھیلے گئے ٹیسٹ میچز پر۔ پچھلے 2 سالوں میں دونوں نے 13،13 ٹیسٹ کھیلے، بابر اعظم نے 5 سینچریز کے ساتھ 1223 رنز بنائے جب کہ ویرات کوہلی نے 3 سینچریز کے ساتھ 909 رنز بنائے۔

پچھلے 2 سالوں میں کھیلے گئے t20 میچز میں بابر اعظم نے 46 کی ایورج سے 650 رنز بنائے۔ جب کہ ویرات کوہلی نے 57 کی ایورج سے 692 رنز بنائے۔

ان تمام سٹیٹ کو دیکھ کر لگتا ہے بابر اعظم کو لمبی ریس کا گھوڑا بننا ہو گا ۔ گریٹ کہلوانے کے لئے میراتھن جیتنی پڑتی ہے ۔ پہلے 100 میٹر اور 200 میٹر میں کون آگے رہا فرق نہیں پڑتا۔

  • باقی اعداد و شمار ایک طرف اور کوہلی کا بلے بازی اور کپتانی میں جارح مزاجی ایک طرف۔ یہ کوہلی کی سب سے بڑی خوبی ہے اور بابر اعظم اس میں بہت پیچھے ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >