بھارت میں کرونا کا قہر، غیرملکی کھلاڑی آئی پی ایل چھوڑکر جانے لگے

بھارت میں کرونا کے قہر نے آئی پی ایل پر میں بھی خوف طاری کردیا ہے، متعدد غیر ملکی کرکٹرز آئی پی ایل چھوڑ کر جانے لگے۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں ایک طرف کرونا کا قہرنازل ہے، روزانہ ساڑھے تین لاکھ کے قریب کرونا کیسز سامنے آرہے ہیں، اسیی قہر کے سائے میں انڈین پریمیئر لیگ بھی جاری ہے۔

آئی پی ایل میں شامل آسٹریلوی کرکٹرز کرونا کے تشویشناک پھیلاؤ کے باعث خوف کا شکار ہوگئے ہیں اور انہوں نے ذاتی وجوہات کا عذر پیش کرتے ہوئے آئی پی ایل چھوڑ کر واپس جانا شروع کردیاہے۔

آسٹریلوی فاسٹ باؤلر اینڈریوٹائی نے بھی ذاتی عذر پیش کرکےآئی پی ایل سے دستبرداری اختیار کرلی اور وطن واپس روانہ ہوگئے ۔ اینڈریو ٹائی کے بعد ایڈم زیمپا اور کین رچرڈسن بھی انڈین پریمئیر لیگ سے علیحدہ ہوگئے اور آسٹریلیا واپس روانہ ہوگئے ہیں۔

اس سے قبل انگلش بیٹسمین لیام لیونگ اسٹون بھی تھکاوٹ کا بہانہ بناکر واپس چلے گئے تھے۔ بھارت کے روی چندرن ایشون بھی کووڈ کی وجہ سے لیگ سے دستبردار ہو گئے ہیں۔

بھارت میں کرونا کے بڑھتے کیسز پر کرکٹ آسٹریلیا بھی اپنے کھلاڑیوں سے متعلق فکرمند ہے ۔ کرکٹ آسٹریلیا کے مطابق بھارت میں کرونا کی صورتحال کا جائزہ لے رہےہیں، نازک صورت حال میں کھلاڑیوں سے مسلسل رابطے میں ہیں۔

کرونا کی بگڑتی صورتحال کے باوجود آئی پی ایل کو جاری رکھنے پر انڈین کرکٹ بورڈ اور آئی پی ایل انتظامیہ شدید تنقید کی زد میں ہے۔ بعض میڈیا رپورٹس میں دعویٰ کیا جارہا ہے کہ انڈین پریمئیر لیگ کو ملتوی کرنے پر غورہورہا ہے۔۔

بھارت میں کرونا کےبڑھتےکیسز کے باعث ٹی20ورلڈکپ کا انعقاد خطرے میں پڑگیا ہے، ٹی 20 میگا ایونٹ میں حصہ لینے والے دو سے تین ممالک نے بھارت میں کرونا کی بگڑتی صورتحال کے باعث وہاں کھیلنے پر اپنے خدشات کا اظہار کیا ہے۔

امکان ظاہر کیا جارہا ہے کہ ٹی 20 ورلڈکپ کا انعقاد آسٹریلیا میں ہو جس کیلئے کچھ رکن ممالک بھی متحرک ہیں کیونکہ آسٹریلیا میں کرونا کی صورتحال مکمل کنٹرول میں ہے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >