قومی اسکواڈ کی رمیز راجہ سے ملاقات، شکایتوں کے انبار لگا دیئے

 

قومی کرکٹ اسکواڈ کے کھلاڑیوں نے متوقع چیئرمین پی سی بی رمیز راجہ سے ملاقات کی ہے جس میں کھلاڑیوں کی جانب سے شکایتوں کے انبار لگادیئے گئے ہیں۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ کے نئے متوقع چیئرمین رمیز راجہ سے ان کی خواہش پر کھلاڑیوں کی ملاقات کروائی گئی، رمیز راجہ نے کھلاڑیوں کے مسائل سنے اور ن کے حل کی یقین دہانی بھی کروائی۔

رپورٹ کے مطابق ملاقات کے دوران کھلاڑیوں نے سابق قومی کرکٹر کے بطور کوچ تعیناتی کی مخالفت کی اور غیر ملکی کوچ کی حمایت کرتے دکھائی دیئے۔

کھلاڑیوں نے اپنے موقف کی دلیلیں دیتے ہوئے کہا کہ سابق قومی کرکٹرز بطور کوچ بہت جلد رائے قائم کرلیتے ہیں، کوچز اور کرکٹ بورڈ میڈیا کا دباؤ برداشت نہیں کرپاتے اور سوشل میڈیا مہم کھلاڑیوں کے مستقبل کے فیصلے کی بنیاد بن جاتی ہے۔

رپورٹ کے مطابق کھلاڑیوں نے رمیز راجہ سے کہا کہ قومی کوچز کسی بھی کھلاڑی کی کمزوری کو اس کے خلاف استعمال کرتے ہیں،اسی طرح ٹیم میں منتخب ہونے کیلئے فٹنس کے بھی مختلف معیار ہیں جس سے کھلاڑی متنفر دکھائی دیئے۔

کھلاڑیوں نے رمیز راجہ سے گفتگو کے دوران الزام عائد کیا کہ کچھ کھلاڑی فٹنس کے معیار پر پورا اترنے کے باوجود ٹیم سے باہر ہوتے ہیں جبکہ فٹنس معیار پر پورا نہ اترنے والے ٹیم کا حصہ بن جاتے ہیں۔

رمیز راجہ نے کھلاڑیوں کے تمام مسائل او ر شکایتیں سننے کے بعد انہیں کرکٹ پر توجہ دینے کی ہدایت کرتے ہوئے یقین دہانی کروائی کہ تمام مسائل کو جلد حل کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں قومی کرکٹ ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق اور باؤلنگ وقار یونس نے اپنے عہدوں سے استعفیٰ دیدیا تھا جس کے بعد ثقلین مشتاق اور عبدالرزاق کو نیوزی لینڈ سیریز کیلئے عبوری کوچز کے فرائض سونپے گئے تھے۔


  • Featured Content⭐


    24 گھنٹوں کے دوران 🔥


    From Our Blogs in last 24 hours 🔥


    >